بلیو وہیل چیلنج گیم کا اینڈ موت، دنیا بھرمیں 130 افراد بھینٹ چڑھ گئے

گیم میں 50 روز میں 50 مختلف ٹاسک کے ساتھ پلئیر کو نفسیاتی طور پر سخت چیلنجز سے گزارا جاتا ہے بلیو وہیل گیم کو ایجاد کرنے والے 21 سالہ فلپ کا تعلق روس سے ہے جو اس وقت سکول جانے والی 16 لڑکیوں کو خود کشی پر مجبور کرنے کے الزام میں زیر حراست ہے۔
لاہور: (دنیا نیوز) بلیو وہیل چیلنج گیم ایک ایسا کھیل ہے جس کی جیت اس کے کھیلنے والے کی موت سے ہوتی ہے، دنیا بھرمیں ایک سو تیس افراد اس خونی گیم کی بھینٹ چڑھ چکے ہیں۔ قاتل موبائل گیم بلیو وہیل چیلنج کا دنیا بھر میں چرچا ہے، اس گیم کا اینڈ اپنے پلیئر کی موت کے ساتھ ہوتا ہے۔ روس میں بننے والی یہ گیم دنیا بھر میں 130 افراد کی جان لے چکی ہے۔ حال ہی میں بھارتی شہر جودھ پور کی ایک سترہ سالہ لڑکی اس خونی گیم کا شکار ہوئی، گیم میں 50 روز میں 50 مختلف ٹاسک کے ساتھ پلئیر کو نفسیاتی طور پر سخت چیلنجز سے گزارا جاتا ہے، خود کو بلیڈ سے زخمی کرنا، رات کو ڈراؤنی فلمیں دیکھنا، منشیات کا استعمال، اونچی عمارت پر چڑھنا سمیت، گیم کا انسٹرکٹر آن لائن صارف کے دماغ کو کنٹرول کرتا ہے، اور آخری روز اس کےدماغ کو قابو کر کے خود کشی پر مجبور کر دیا جاتا ہے۔ بلیو وہیل گیم کو ایجاد کرنے والے 21 سالہ فلپ کا تعلق روس سے ہے، جو اس وقت اسکول جانے والی 16 لڑکیوں کو خودکشی پر مجبور کرنے کے الزام میں زیر حراست ہے۔

Source

Comments

comments

//pagead2.googlesyndication.com/pagead/js/adsbygoogle.js

اپنا تبصرہ بھیجیں