کیوں چُراتے ہو دیکھ کر آنکھیں

کیوں چُراتے ہو دیکھ کر آنکھیں کر چکیں میرے دل میں گھر آنکھیں ضعف سے کچھ نظر نہیں آتا کر رہی ہیں ڈگر ڈگر آنکھیں چشمِ نرگس کو دیکھ لیں پھر ہم تم دکھا دو جو اِک نظر آنکھیں ہے دوا ان کی آتشِ رخسار سینکتے ہیں اس آگ پر آنکھیں کوئی آسان ہے ترا مزید پڑھیں