بچھڑ جائیں گے ، ہم لیکن

بچهڑ ﺟﺎﺋﯿﮟ ﮔﮯ ، ﮨﻢ ﻟﯿﮑﻦ  ﮨﻤﺎﺭﯼ ﯾﺎﺩ ﮐﮯ ﺟُﮕﻨﻮ ، ﺗﻤﮩﺎﺭﯼ ﺷﺐ ﮐﮯ ﺩﺍﻣﻦ ﻣﯿﮟ ﺳِﺘﺎﺭﮦ ﺑﻦ ﮐﮯ ﭼﻤﮑﯿﮟ ﮔﮯ ﺗُﻤﮩﯿﮟ ﺑﮯﭼﯿﻦ ﺭﮐﮭﯿﮟ ﮔﮯ ﺑﮩﺖ ﻣﺼﺮﻭﻑ ﺭﮨﻨﮯ ﮐﮯ ، ﺑﮩﺎﻧﮯ ﺗﻢ ﺑﻨﺎﺅ ﮔﮯ ﺑﮩﺖ ﮐﻮﺷﺶ ﮐﺮﻭ ﮔﮯ ﺗُﻢ ﮐﮧ ﺍﺏ ﻣﻮﺳﻢ ﺟﻮ ﺑﺪﻟﯿﮟ ﺗﻮ ، ﮨﻤﺎﺭﯼ ﯾﺎﺩ ﻧﮧ ﺁﮰ ﻣﮕﺮ ﺍﯾﺴﺎ ﻧﮩﯿﮟ ﮨﻮﮔﺎ… !!! مزید پڑھیں

اے مصور میرے محبوب کی ،،،تصویر بنا 

اے مصور میرے محبوب کی ،،،تصویر بنا  تجھ سے بن جائے تو بگڑی ہوئی تقدیر بنا زلف ایسی ہو کے برسات بھی پانی مانگے  سرخ ہونٹوں سے ہر اک پھول جوانی مانگے نرگسی آنکھوں میں کاجل کے وہی تیر بنا  اے مصور میرے محبوب کی ،،،تصویر بنا میں تجھے حسن کے انداز سکھاؤں کیسے  اپنی مزید پڑھیں

ﺍﮎِ ہی ﺗﻮ ﻋﺎﺩﺕ ﮨﮯ

ﺍﮎِ ﮨﯽ ﺗﻮ ﻋﺎﺩﺕ ﮨﮯ،  ﺻﺒﺢ ﻭ ﺷﺎﻡ ﻟﮑﮭﺘﺎ ﮨﻮﮞ۔  ﺗﻤﮭﯿﮟ ﻣﺤﺴﻦ،  ﺗﻤﮭﯿﮟ ﺩﻟﺒﺮ،  ﺗﻤﮭﯿﮟ ﮔﻠﻔﺎﻡ ﻟﮑﮭﺘﺎ ﮨﻮﮞ۔  ﻣﯿﮟ ﮨﺎﺗﮭﻮﮞ ﭘﺮ،  ﮐﺘﺎﺑﻮﮞ ﭘﺮ، ﺩﺭﺧﺘﻮﮞ ﭘﺮ،  ﺩﯾﻮﺍﺭﻭﮞ ﭘﺮ،  ﺟﮩﺎﮞ ﻟﮑﮭﻮﮞ،  ﺟﺐ ﻟﮑﮭﻮﮞ،  ﺗﻤﮭﺎﺭﺍ ﮨﯽ ﻧﺎﻡ ﻟﮑﮭﺘﺎ ﮨﻮﮞ

تجھے اس قدر ہے شکا یتیں

تجھے اس قدر ہے شکا یتیں کبھی سُن لے میری حکا یتیں تجھے گر نہ کوئ ملال ہو میں بھی ایک تجھ سے گلہ کروں؟ نہیں اور کچھ بھی جواب اب میرے پاس ترے سوال کا تُو کرے گا کیسے یقیں میرا مجھے تُو بتادے میں کیا کروں؟ یہ جو بھولنے کا سوال ہے میری مزید پڑھیں

میری سوچ تم میری ذات تم

میری سوچ تم میری ذات تم میری زندگی کا عنوان تم میری پریت تم میری بات تم میری زندگی کا گیت تم میری صبح تم میری شام تم میری زندگی کی رات تم میرا ماضی تم میرا حال تم میری زندگی کی داستان تم میرا دل تم میری جان تم میری زندگی کا نصاب تم مزید پڑھیں

میرے وطن یہ عقیدتیں اور

میرے وطن یہ عقیدتیں اور پیار تجھ پہ نثار کر دوں محبتوں کے یہ سلسلے  بےشمار تجھ پہ نثار کر دوں میرے وطن میرے بس میں ہو تو تیری حفاظت کروں میں ایسے خزاں سے تجھ کو بچا کے رکهوں بہار تجھ پہ نثار کر دوں تیری محبت میں موت آئے تو اس سے بڑھ مزید پڑھیں

ہاتھ چھوٹیں بھی تو رشتے نہیں چھوڑا کرتے 

ہاتھ چھوٹیں بھی تو رشتے نہیں چھوڑا کرتے  وقت کی شاخ سے لمحے نہیں توڑا کرتے  جس کی آواز میں سِلوٹ ہو، نگاہوں میں شکن ایسی تصویر کے ٹکڑے نہیں جوڑا کرتے شہد جینے کا مِلا کرتا ہے تھوڑا تھوڑا جانے والوں کیلئے دِل نہیں تھوڑا کرتے لگ کے ساحل سے جوبہتا ہے اُسے بہنے مزید پڑھیں

درد پھیل جائے تو

درد پھیل جائے تو ایک وقت آتا ہے دل دھڑکتا رہتا ہے آرزو گزیدوں کے حوصلے نہیں چلتے دشتِ بے یقینی میں آسرے نہیں چلتے راہ روؤں کی آنکھوں میں منزلیں نہ جب تک ہوں ، قافلے نہیں چلتے ایک ذرا توجہ سے دیکھئے تو کھلتا ہے لوگ ان پہ چلتے ہیں, راستے نہیں‌ چلتے مزید پڑھیں

اور تو کچھ نہ ہوا پی کے بہک جانے سے 

اور تو کچھ نہ ہوا پی کے بہک جانے سے  بات مے خانے کی باہر گئی مے خانے سے کوئی پیمانہ لڑا جب کسی پیمانے سے  ہم نے سمجھا کہ پکارا گیا مے خانے سے دو نگاہوں کا جوانی میں ہے ایسا ملنا  جیسے دیوانے کا ملنا کسی دیوانے سے دل کی دنیا میں سویرا مزید پڑھیں

فرض کرو تم کچھ نہ پاؤ !

فرض کرو تم کچھ نہ پاؤ ! اپنا آپ لُٹا کر بھی ! فرض کُرو کوئی مُکر ھی جائے ! سچی قسم اُٹھا کر بھی ! اور فرض کرو یہ فرض نہ ھو! سچی اِک حقیقت ھو تیرے عشق کے ھر رستے پر جاناں اِک قیامت ھو ! اور سُنا ھے یہ قیامت ! خون مزید پڑھیں