ہم نے غزلوں میں تمہیں ایسے پکارا محسن…

ہم نے غزلوں میں تمہیں ایسے پکارا محسن… جیسے تم ہو کوئی قسمت کا ستارا محسن.. اب تو خود کو بهی نکهارا نہیں جاتا ہم سے… وہ بهی کیا دن تهے کہ تجھ کو بهی سنوارا محسن… اپنے خوابوں کو اندھیروں کے حوالے کر کے.. ہم نے صدقہ تیری آنکهوں کا اتارا محسن… ہم کو مزید پڑھیں

وہی درپیش ہے پھر زندگی، خوابوں خیالوں کی

وہی درپیش ہے پھر زندگی، خوابوں خیالوں کی کہاں ہے اب تمہاری وہ، محبّت اتنے سالوں کی ؟ اگر میرے مقدر میں، اندھیرا ہی اندھیرا تھا کہانی کیوں سنائی تھی، مجھے تم نے اجالوں کی بڑا ہے فرق دونوں میں، مگر دلچسپ ہیں دونوں تیری دنیا جوابوں کی، میری دنیا سوالوں کی تمھیں جب سے مزید پڑھیں