ن لیگ آزادی مارچ سے متعلق تاحال کوئی فیصلہ نہ کرسکی

لاہور : مسلم لیگ ن دھرنے میں شرکت دے متعلق حتمی فیصلہ نہ کر سکی، لیگی رہنما احسن اقبال نے کہاہے کہ آج ن لیگ نے سفارشات تیار کی ہیں ، کل پارٹی قائدنوازشریف سفارشات پرحتمی فیصلہ کریں گے۔

شہباز شریف کی زیرصدارت اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے پارٹی کے مرکزی سیکریٹری جنرل احسن اقبال نے کہا کہ مولانا فضل الرحمان کے دھرنے کے حوالے سے اشتعال انگیز بیانات دینے کی بجائے اپنے اور اپنے لیڈر کے وہ کلپ دیکھنے چاہئے جو وہ اپنے دھرنے کے دنوں میں دیا کرتے تھے ، اس سے ان کی سیاسی تربیت ہوگی ، حکومتی وزرا کے مولانا فضل الرحمان کے آزادی مارچ کے بار ے میں بیانات قابل مذمت ہیں۔
انہوں نے کہا کہ ن لیگ نے فضل الرحمان کے دھرنے میں شرکت سے متعلق ن لیگ نے اپنی سفارشات تیار کرلی ہیں ، ا س سلسلے میں کل ن لیگ کے صدر شہباز شریف پارٹی قائد میاں نواز شریف سے ملاقات کریں گے اور جو بھی پارٹی صدر کا فیصلہ ہوگا اس پر اعلان کردیاجائے گا۔

احسن اقبال کا کہنا تھا کہ وزیر اعظم کوصرف اپوزیشن کو جیل میں قید کرنے کی فکر ہے ، رانا ثناءاللہ پر جھوٹا مقدمہ بنایا گیاہے۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان کے ذہن میں اپوزیشن کوجیلوں میں ڈالنے کے سوا کچھ نہیں ہے ، ان کو فکر ہے کہ اپوزیشن کوکیسے جیلوں میں ڈالیں ؟مسلم لیگ ن اس وقت عمران خان کے حسد کا نشانہ بنی ہوئی ہے۔

News Source

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں